Categories
Breaking news

ہندوانتہا پسند درندگی کی تمام حدیدں پار کرگئے، مسلمان شہری کا ہاتھ ہی کاٹ ڈالا

Advertisement
Advertisement

بھارت میں  مسلمان شہری

بھارت میں ہندوانتہا پسندوں نے درندگی کی تمام حدیدں پار کردیں، نہتے اور مظلوم مسلمان شہری کو بہیمانہ تشدد کے بعد ہاتھ کاٹ کر ساتھ لے گئے۔

بھارتی ریاست ہریانہ میں وحشیوں نے صرف اس بنیاد پر اخلاق نامی مسلمان شخص کا تیز دھار آلے سے ہاٹھ کاٹ دیا کیوں کہ ہاتھ پر 786 لکھا تھا، واقعے کے بعد پولیس نے تاحال کسی ملزم کو گرفتار نہیں کیا جبکہ متاثرہ شخص علاج اور انصاف کا منتظر ہے۔

رپورٹ کے مطابق متاثرہ شخص اخلاق کے بھائی اکرام کا کہنا ہے کہ میرا بھائی نئی ملازمت کی تلاش میں ہریانہ گیا تھا کیوں کہ لاک ڈاؤن کے باعث نائی کی دکان میں شدید مندی کا سامنا تھا، وہاں دو نوجوانوں سے اس کی معمولی تلخ کلامی ہوئی جس کے بعد وہ دونوں کئی شرپسندوں کو اپنے ساتھ لے آئے۔

انہوں نے بتایا کہ تشدد کرنے والوں میں خاتون بھی شامل تھی، انہوں نے صرف بری طرح مارا بلکہ اپنے ساتھ دایاں ہاتھ کاٹ کر بھی لے گئے، اور بھائی کو مردہ سمجھ کر سڑک کنارے پھینک دیا۔

اہل خانہ کا کہنا تھا کہ اخلاق نے کسی بھی طرح فون کر کے واقعے سے متعلق گھر والوں کو آگاہ کیا، مقامی اسپتال سے متاثرہ شخص کا علاج جاری ہے، پولیس ملزمان کی گرفتاری کے لیے کوئی تعاون نہیں کررہی۔

Advertisement

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *