Categories
Breaking news

ہسپانوی بچوں کی تلاش،بچے اور والد نہیں ملے لیکن ۔۔۔۔

میڈرڈ (محمد نبی) مبینہ طور پر انا (Anna) اور اولیویا (Olivia) کو 27 اپریل کو ان کے والد نے اغوا کیا تھا۔ انہوں نے بچوں کی ماں سے کہا تھا کہ وہ بچوں کا چہرہ پھر کبھی نہ دیکھ پائیں گی۔ دوسرے دن ان کی خالی کشتی ڈوبتی ہوئی تینیرائف (Tenerife) کے قریب ملی تھی۔ 30 مئی سے سمندری ریسرچ کے بحری بیڑا ‘Ángeles Alvariño’ گم شدہ بچوں کی تلاش کر رہا ہے۔ اس مہم کے دوران بچوں کا نشان تو نہیں ملا لیکن تینیرائف میں ایک آکسیجن سلنڈر اور غلاف کا پردہ ملا ہے۔ خبر رساں ادارے Efe کو متعلقہ ذرائع نے بتایا کہ یہ دونوں چیزیں بچوں کے والد کی تھیں۔

بچوں کے والد 37 سالہ Gimeno کے خون کے دھبے کشتی پر پائے گئے تھے۔ بچوں کے تحفظ کی کار سیٹ بھی سمندر میں تیرتی نظر آئی تھی۔ سیول گارڈ نے بتایا کہ یہ انا کی تھی جس کی عمر ایک برس تھی۔ اولیویا 6 سال کی تھیں۔

بچے اپنے والد کے پاس گئے ہوئے تھے۔ والد اپنی سابقہ بیوی کو ٹیلی فون پر مسلسل بتاتا رہا کہ وہ بچوں کو دوبارہ نہیں دیکھیں گی۔ لیکن ساتھ ہی وہ یہ بھی کہہ رہا تھا کہ وہ خود بچوں کا خیال رکھیں گے۔ تلاش و تحقیق کرنے والوں کا خیال ہے کہ گیمینو کو ایک یا زیادہ افراد کا تعاون حاصل تھا جو پہلے سے طے شدہ ایک منصوبے کے تحت بچوں کو انہی کے والد سے اغوا کروایا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *