Categories
Breaking news

کولمبس کا جنم اٹلی، پرتگال، اسپین میں سے کہاں پر ہوا تھا؟ جینیاتی ٹیکنالوجی نے معمہ حل کر دیا

میڈرڈ (محمد نبی) آنے والے اکتوبر تک جدید جینیاتی ٹیکنالوجی کی بدولت تاریخ کا سب سے بڑا معمہ حل ہو جائے گا۔ گرنادا یونیورسٹی میں ہونے والی تحقیق جلد امریکہ دریافت کرنے والے کریسٹوفر کولمبس کی جائے پیدائش معلوم کر لے گی۔ اس جنیاتی تحقیق میں کولمبس کی جائے پیدائش معلوم کرنے کےلئے ان کی ہڈیوں کا موازنہ اس کے خاندان کے افراد سے کیا جائے گا۔ شنید ہے اب تک جو کچھ تاریخ کی کتابوں میں بیان ہوا ہے، نتائج آنے کے بعد اس پر نظر ثانی کرنی پڑے۔

اس منصوبے کا عنوان “کولمبس کا ڈی این اے: ان کی حقیقی شناخت” ہے۔ پراجیکٹ کے محققین نے کہا ہے کہ وہ ایک فیصلہ کن مرحلے پر آن پہنچے ہیں۔ انہیں جدید جنیاتی ٹیکنالوجی کا انتظار کرنا پڑا جو انہیں اب کامیابی کے بالکل قریب پہنچا چکی ہے۔

کولمبس کے باقیات تحقیق اور تجزیے کے لیے خود یونیورسٹی، یورپین اور امریکی لیبارٹیز کو بھیجے جا چکے ہیں۔ کسی شک یا غلط بیانی کے امکان کو ختم کرنے کے لئے اٹلی کو بھی تحقیق میں شامل کیا گیا ہے۔ واضح رہے کہ اب تک کولمبس کی جائے پیدائش اٹلی کا شہر جینوا بتایا جاتا رہا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *