Categories
Breaking news

کراچی، سرکلر ریلوے کا آغاز 16 نومبر کے بجائے 19 نومبر سے ہوگا

کراچی میں سرکلر ریلوے کے انتظامات تاحال مکمل نہ ہوسکے جس کی وجہ سے پاکستان ریلویز نے اعلان کیا ہے کہ سرکلر ریلوے کا آغاز اب 16 نومبر کے بجائے 19نومبر سے ہوگا۔

پاکستان ریلوے ذرائع کے مطابق پپری سے اورنگی ٹاؤن تک 14 کلو میٹر کا ٹریک مکمل کلیئر نہیں ہوسکا جبکہ اسٹیشنز تاحال بنیادی سہولتوں سے محروم اور کھنڈر بنے ہوئے ہیں۔

پاکستان ریلویز کا 16 نومبر سے کراچی سرکلر ریلوے شروع کرنے کا اعلان

ڈی ایس کا کہنا تھا کہ صبح 7 بجے اورنگی ٹاؤن اسٹیشن سے پہلی ٹرین روانہ ہوگی، اس کے بعد صبح 10 بجے دوسری ٹرین روانہ ہوگی۔

ریلوے ذرائع نے بتایا کہ ٹکٹ بھی ٹرین کے اندر سے ٹکٹ چیکر سے ملے گا، اس کے علاوہ ٹریک کے راستوں میں پھاٹک بھی نہیں لگائےجارہے۔

اس سے قبل ڈویژنل سپریڈنٹ آفس ریلوے کراچی ارشد سلام خٹک نے 16 نومبر سے کراچی میں سرکلر ریلوے کے آغاز کا اعلان کرتے ہوئے بتایا تھا کہ یہ سروس صرف پِپری سے اورنگی ٹاؤن تک کے لیے ہوگئی۔

سندھ حکومت سرکلر ریلوے کی بحالی میں مکمل تعاون کرے گی، وزیراعلیٰ

اجلاس میں سی سی آئی کے اجلاس میں ہونے والے فیصلے اور کراچی شہر میں مقامی ٹرین منصوبہ شروع کرنے کے سپریم کورٹ آف پاکستان کی ہدایات پر عملدرآمد کرنے کے لیے منعقد کیا گیا۔

خیال رہے کہ 6 مارچ کو سپریم کورٹ نے محکمہ ریلوے کو 6 ماہ کے اندر پرانی سرکلر ریلوے بحال کرنے کا حکم دیا تھا۔

قومی خبریں سے مزید

Original Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *