Categories
Breaking news

پاکستان میڈیکل کمیشن نے 30 دن میں ڈاکٹروں کی غفلت کے 60 کیسز حل کرلیے

فائل فوٹو
فائل فوٹو

پاکستان میڈیکل کمیشن (پی ایم سی) نے 30 دنوں میں ڈاکٹروں کی غفلت کے 60 کیسز حل کرلیے۔

ترجمان پی ایم سی کے مطابق 52 ڈاکٹروں کو سزا سنائی گئی ہے جن کے خلاف شکایات تھیں۔

ترجمان کے مطابق ڈاکٹروں کی غفلت کے خلاف عوام اور مریضوں کی شکایات کے ازالے کے لیے انضباطی کمیٹی کے متعدد اجلاس منعقد کیے گئے۔

پی ایم سی کی ڈسپلنری کمیٹی میڈیکل اور ڈینٹل غفلت سے متعلق تمام مسائل/کیسز کی تحقیقات/تفتیش اور حل کرنے کی ذمہ دار ہے۔

یہ کمیٹی پی ایم سی کونسل کے اراکین اور زیر سماعت مقدمات سے متعلقہ تمام خصوصیات کے پیشے کے سینئر ماہرین پر مشتمل ہے۔

ترجمان کا کہنا ہے کہ صرف 30 دنوں میں تمام صوبوں میں کئی اجلاس ہوئے، ڈسپلنری کمیٹی نے تمام متعلقہ شکایات کو حل کرنے کے لیے 60 مقدمات کی سماعت کی۔

پاکستان میڈیکل کمیشن کے صدر کے وفاقی وزیر سے اختلافات

پاکستان میڈیکل کمیشن( پی ایم سی) کے صدر ڈاکٹر نوشاد شیخ کے وفاقی وزیر صحت قادر پیٹل سے اختلافات پیدا ہوگئے۔

انضباطی کمیٹی نے 9 ڈاکٹروں کے لائسنس منسوخ/معطل کیے، 10 ڈاکٹروں کو جرمانے کیے جبکہ 5 ڈاکٹروں کو ان کی معمولی غفلت پر وارننگ جاری کی گئی اور 13 ڈاکٹروں کو کو بری کردیا گیا۔

ترجمان کے مطابق پی ایم سی کسی بھی ڈاکٹر کی غفلت یا بدتمیزی کو برداشت نہیں کرے گی اور کسی بھی ڈاکٹر کو معصوم مریضوں کی زندگیوں سے کھیلنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔

قومی خبریں سے مزید

Original Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *