Categories
Breaking news

ٹرانس جینڈرز کے حقوق کے تحفظ سے متعلق ترمیمی بل سینیٹ میں پیش

ٹرانس جینڈرز کے حقوق کے تحفظ سے متعلق ترمیمی بل سینیٹ میں پیش

سینیٹر مشتاق احمد نے ٹرانس جینڈرز کے حقوق کے تحفظ سے متعلق ترمیمی بل سینیٹ اجلاس میں پیش کردیا۔

سینیٹ اجلاس میں پیش کیے گئے بل کے مطابق ٹرانس جینڈرز کی خود تصور کردہ صنفی شناخت کی بجائے میڈیکل بورڈ کی رائے پر رجسٹریشن کی جائے۔

بل کے مطابق ہر ضلع کی سطح پر صنفی ری اسائنمنٹ میڈیکل بورڈ بنایا جائے جو وزیراعظم اور وزرائے اعلیٰ کی منظوری سے بنایا جائے۔

جسٹس (ر) ثاقب نثار سمیت متعلقہ افراد قائمہ کمیٹی اجلاس میں طلب

سابق چیف جج گلگت بلتستان رانا محمد شمیم کے انکشافات پرقومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے اطلاعات و نشریات نے اجلاس طلب کرلیا ہے ۔

ترمیمی بل کے مطابق صنفی ری اسائنمنٹ میڈیکل بورڈ میں پروفیسر ڈاکٹر، سائیکالوجسٹ، مرد، خاتون جنرل سرجن، چیف میڈیکل آفیسر شامل ہوں۔

بل کے مطابق عدم اطمینان پر کسی مرد یا عورت کے جنسی اعضا کی تبدیلی کے لیے آپریشن یا علاج نہیں کیا جائے گا۔

سابق چیف جج گلگت بلتستان کےانکشافات، آج کی سماعت کا تحریری حکم نامہ

سابق چیف جج گلگت بلتستان کے انکشافات پر اسلام آباد ہائی کورٹ نے تحریری حکم نامہ جاری کردیا ہے۔

موجودہ ٹرانس جینڈر قانون سے ہم جنس پرستوں کی شادی جائز ہونا جیسے نتائج برآمد ہوتے ہیں۔

بل کے اغراض و مقاصد سے متعلق سینیٹر مشتاق احمد نے کہا کہ یہ قانون مسلم خواتین کی عظمت کی خلاف ورزی ہے، جنس کی شناخت کو ذاتی معاملہ قرار دینا اسلامی تعلیمات کے مخالف ہے۔

قومی خبریں سے مزید

Original Article

Leave a Reply

Your email address will not be published.