Categories
Breaking news

وفاقی حکومت کی جانب سے نظر انداز کرنے پر بی اے پی ناراض

وفاقی حکومت کی جانب سے نظر انداز کرنے پر بی اے پی ناراض

بلوچستان عوامی پارٹی کی قیادت نے وفاقی حکومت کی جانب سے نظر انداز کئے جانے پر اظہار ناراضی کرتے ہوئے پی ٹی آئی کے ساتھ تعلقات پر نظرثانی کا فیصلہ کیا ہے۔

بی اے پی کا اجلاس منعقد ہوا جس میں وزیراعلیٰ بلوچستان میر عبدالقدوس بزنجو، چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی، اسپیکر جان محمد جمالی سمیت اراکین سینیٹ، قومی اسمبلی اور صوبائی وزراء نے شرکت کی۔

حکومت کا کسی وقت بھی دھڑن تختہ ہوسکتا ہے، رانا ثنااللہ

مسلم لیگ (ن) پنجاب کے صدر رانا ثنااللہ نے دعویٰ کیا ہے کہ حکومت کا کسی وقت بھی دھرن تختہ ہوسکتا ہے۔

اجلاس میں کہا گیا کہ بڑا اتحادی ہونے کے باوجود بی اے پی کو اس کا جائز مقام نہیں دیا جارہا۔ بی اے پی وفاق میں پی ٹی آئی کی غیر مشروط حمایت کرکے تھک چکی ہے، وفاقی کابینہ میں بی اے پی کی نمائندگی نہ ہونے کے برابر ہے۔

وزیراعلیٰ میر عبدالقدوس بزنجو پارٹی کے تحفظات سے وزیراعظم عمران خان کو آگاہ کریں گے۔

پارٹی اعلامیے کے مطابق مطالبات پورے نہ ہونے، تحفظات دور نہ کرنے کی صورت میں بی اے پی آئندہ کا لائحہ عمل طے کرے گی۔

قومی خبریں سے مزید

Original Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *