Categories
Breaking news

وزیر اعلیٰ نے اندرونِ لاہور پانی کی قلت کا نوٹس لے لیا

وزیر اعلیٰ نے لاہور میں پانی کی قلت کا نوٹس لے لیا

وزیراعلیٰ پنجاب حمزہ شہباز نے لاہور کے بعض علاقوں میں پانی کی قلت کا نوٹس لیتے ہوئے واسا کو قلت دور کرنے کیلئے ہنگامی اقدامات کا حکم دے دیا۔

لاہور میں وزیراعلیٰ پنجاب حمزہ شہباز کی زیر صدارت اعلیٰ سطح کا اجلاس ہوا جس میں میاں مجتبی شجاع، ملک اسد علی کھوکھر، سمیع اللّٰہ خان، چوہدری شہباز احمد، میاں مرغوب احمد، رمضان صدیق بھٹی، غزالی سلیم بٹ، سابق ایم پی اے شعیب صدیقی، سابق میئر لاہور مبشر جاوید کے علاوہ پرنسپل سیکریٹری وزیراعلیٰ، ایم ڈی واسا اور متعلقہ حکام نے شرکت کی۔

اجلاس میں لاہور کے بعض علاقوں خصوصاً اندرون شہر میں پانی کی قلت کا نوٹس لیا گیا۔

صوبے میں مفت ادویات کی فراہمی یقینی بنائی جائے،وزیر اعلیٰ حمزہ شہباز

وزیراعلیٰ پنجاب حمزہ شہباز کا کہنا ہے کہ صوبے کے اسپتالوں میں عام آدمی کو پورا احترام ملنا چاہیے، مفت ادویات کی فراہمی کو یقینی بنایا جائے، اسپتالوں میں ٹیکنیکل کیڈر کی خالی اسامیوں پر بھرتیوں کا اعلان بھی کیا۔

حمزہ شہباز نے واسا کو احکامات جاری کیے کہ پانی کی قلت والے علاقوں کے لئے مربوط نظام بنایا جائے، جہاں ضرورت ہو وہاں ٹیوب ویل چلانے کیلئے جنریٹر کا انتظام کیا جائے۔

وزیر اعلیٰ نے لاہور میں مون سون سیزن سے قبل نالوں کی صفائی کا حکم بھی دیا اور کہا کہ تمام نالوں کی صفائی کیلئے ایکشن پلان تیار کیا جائے اور اسے ٹائم لائن کے ساتھ مرتب کیا جائے۔

حمزہ شہباز کا کہنا تھا کہ بارشوں سے قبل نالوں کی صفائی کا کام ہر صورت مکمل کیا جائے، عید کے بعد ایم ڈی واسا نالوں کی صفائی سے متعلق ویڈیوز کے ساتھ تفصیلی بریفنگ دیں۔

پنجاب میں مئی کا موسم تبدیل، PDMA کا مراسلہ جاری

پراونشل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی (پی ڈی ایم اے) کا کہنا ہے کہ پنجاب میں مئی سے موسم میں غیر معمولی تبدیلی متوقع ہے،غیر معمولی موسمی امکانات کے پیش نظر ڈپٹی کمشنرز کو انتظامات کرنے کی ہدایت کردی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ یونین کونسل کی سطح پر خصوصی ٹیمیں بنائی جائیں اور نالوں کی صفائی کا کام نظر آنا چاہیے، یونین کونسل کی سطح پر نکاسی آب کا میکنزم بھی تیار کیا جائے۔

وزیراعلیٰ پنجاب نے کہا کہ موسم برسات میں کسی کے حیلے بہانے نہیں سنوں گا۔

قومی خبریں سے مزید

Original Article

Leave a Reply

Your email address will not be published.