Categories
Breaking news

وزیراعظم عمران خان کا سری لنکن صدر کو ٹیلی فون

وزیراعظم عمران خان کا سری لنکن صدر کو ٹیلی فون

وزیراعظم عمران خان نے سری لنکن صدر گوتابایا راجا پاکسے کو ٹیلی فون کیا ہے، عمران خان نے سری لنکن صدر کو سیالکوٹ میں سری لنکن شہری پریانتھا کمارا کے قتل پر پاکستانی قوم کے غم و غصے سے آگاہ کیا۔

وزیراعظم نے سری لنکن صدر کو بتایا کہ اب تک واقعے میں ملوث 100 سے زائد افراد کو گرفتار کیا جاچکا ہے۔

عمران خان نے یقین دہانی کروائی کہ ملزمان کے خلاف قانون کے مطابق کارروائی کی جائے گی۔

سانحہ سیالکوٹ: مرکزی ملزمان نے اپنے جرم کا اعتراف کرلیا

جن میں تیرہ مرکزی ملزمان ہیں مرکزی ملزمان طلحہ اور فرحان نے پولیس کے سامنے بھی اپنے جرم کا اعتراف کرلیا ہے۔

اس سے قبل سری لنکن وزیراعظم کا کہنا تھا کہ پاکستان میں انتہا پسند ہجوم کا پریانتھا کمارا پر بہیمانہ تشدد دیکھ کر شدید صدمہ ہوا۔

اُنہوں نے کہا کہ میرا دل پریانتھا کے اہلخانہ کے لیے بہت دُکھی ہے، اُمید ہے وزیراعظم عمران خان ملوث تمام افراد کو انصاف کے کٹہرے میں لانے کا وعدہ پورا کریں گے۔

اسلام جنونیت اور ہجوم کے ہاتھوں قتل کی اجازت کسی صورت نہیں دیتا،احسن اقبال

احسن اقبال نے کہا کہ علماء کرام سے قوم توقع رکھتی ہے کہ وہ قوم کی اس معاملہ میں رہنمائی فرمائیں گے۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز سیالکوٹ میں ایک فیکٹری کا سری لنکن منیجر فیکٹری ملازمین کے تشدد سے ہلاک ہوگیا تھا، مشتعل افراد نے لاش کو سڑک پر گھسیٹنے کے بعد آگ لگادی گئی تھی۔

درندوں کے ہجوم میں ایک انسان بھی سامنے آگیا

ہجوم کے درمیان ایک فرد اسےبچانے کے لیے ہاتھ جوڑتارہا، یہ بےبس فرد پریانتھا کی زندگی کی بھیک مانگتا رہا، مگر اس کی کسی نے بھی نہیں سنی، بلکہ الٹا اسی کو دھکے مارے گئے اور گھسیٹا گیا۔

مشتعل افراد کا دعویٰ تھا کہ مقتول نے مبینہ طور پر مذہبی جذبات مجروح کیے تھے۔

دوسری جانب پولیس تحقیقات میں انکشاف کیا گیا ہے کہ فیکٹری منیجر نے مشتعل افراد سے غلط فہمی کا اظہار کرکے معذرت بھی کی تھی لیکن اس کے باوجود اسے قتل کر دیا گیا۔

قومی خبریں سے مزید

Original Article

Leave a Reply

Your email address will not be published.