Categories
Breaking news

والد اور کزن نے مجھے اغواء کرنے کی کوشش کی: دعا زہرہ

والد اور کزن نے مجھے اغواء کرنے کی کوشش کی: دعا زہرہ

کراچی سے لاپتہ ہونے والی دعا زہرہ نے اپنے والد کے خلاف مقدمہ کر دیا جس میں الزام لگایا ہے کہ والد اور کزن نے مجھے اغواء کرنے کی کوشش کی ہے۔

دعا کا والد پر گھر میں گھسنے کا الزام

دعا زہرہ نے مجسٹریٹ کے روبرو والد کے خلاف استغاثہ دائر کر دیا، دعا نے اپنے والد پر لاہور میں واقع گھر میں گھسنے کا الزام لگا دیا۔

’’والد کزن سے زبردستی شادی کرنا چاہتے ہیں‘‘

خاوند کیساتھ بہت خوش ہوں: دعا زہرہ کا ویڈیو بیان

کراچی سے لاپتہ ہونے والی دعا زہرہ کا ویڈیو پیغام سامنے آ گیا جس میں اس کا کہنا ہے کہ میں اپنے گھر میں خاوند کے ساتھ بہت خوش ہوں، خدارا مجھے تنگ نہ کیا جائے۔

دعا زہرہ نے والد اور کزن پر اغواء کی کوشش کا بھی الزام لگا دیا اور کہا ہے کہ والد میرے کزن زین العابدین سے زبردستی شادی کرانا چاہتے ہیں۔

دعا زہرہ نے اپنی درخواست میں مؤقف اختیار کیا ہے کہ اپنے خاوند کے ساتھ ہنسی خوشی رہ رہی تھی، 18 اپریل کو والد مہدی کاظمی، کزن زین العابدین اچانک گھر میں گھس آئے۔

’’والد اور کزن نے گالم گلوچ کی، دھمکیاں دیں‘‘

دائر کی گئی درخواست میں دعا زہرہ نے کہا ہے کہ والد اور کزن نے مجھ سے اور میرے خاوند سے گالم گلوچ کی، دھمکیاں دیں۔

دعا زہرہ نے الزام عائد کیا ہے کہ والد اور کزن نے مجھے میرے گھر سے اغواء کرنے کی کوشش بھی کی، تاہم اہلِ محلہ کے جمع ہونے پر دونوں کی کوشش کامیاب نہ ہو سکی۔

’’والد اور کزن کے خلاف کارروائی کی جائے‘‘

دعا زہرہ نے عدالت سے استدعا کی ہے کہ اپنی پسند سے شادی کی ہے، خاوند کے ساتھ رہنا چاہتی ہوں، میرے والد اور کزن کے خلاف فوجداری کارروائی کی جائے۔

مجسٹریٹ کی عدالت نے دعا زہرہ کو والد کے خلاف شواہد پیش کرنے کے لیے 18 مئی کو بلا لیا۔

سیشن عدالت نے درخواست نمٹا دی

دعا زہرہ نے ہراساں کرنے سے روکنے کے لیے سیشن عدالت میں بھی درخواست دائر کی ہے۔

سیشن عدالت نے ایس ایچ او وحدت کالونی کو دعا زہرہ کو ہراساں کرنے سے بھی روک دیا اور اس کے ساتھ ہی دعا زہرہ کی درخواست نمٹا دی۔

دعا اور اس کے شوہر کو لاہور لایا جا رہا ہے: پولیس

دوسری جانب لاہور پولیس کے ترجمان کا کہنا ہے کہ دعا زہرہ اور اس کا شوہر ظہیر احمد ڈی پی او آفس اوکاڑہ میں موجود ہیں۔

پولیس نے دعا کو پاکپتن سےتحویل میں لےلیا

لڑکی نے اپنے بیان میں کہا کہ والدین تشدد کرتے تھے اور زبردستی شادی کروانا چاہتے تھے، میری عمر اٹھارہ سال ہے، گھروالوں نے غلط عمر بتائی ہے۔

ترجمان کے مطابق لاہور پولیس کی ٹیم کی حفاظت میں دعا اور اس کے شوہر کو لاہور لایا جا رہا ہے۔

ترجمان لاہور پولیس کا مزید کہنا ہے کہ دعا زہرہ سے متعلق کراچی پولیس کو اطلاع کر دی گئی ہے۔

لاہور پولیس کے ترجمان کا یہ بھی کہنا ہے کہ آئی جی پنجاب کی ہدایات پر کراچی پولیس سے ہر ممکن تعاون جاری ہے۔

قومی خبریں سے مزید

Original Article

Leave a Reply

Your email address will not be published.