Categories
Breaking news

نواز شریف نے ہر دفعہ اقتدار ملنے کے بعد اداروں کو کمزور کیا، چوہدری شجاعت حسین

Advertisement
Advertisement

نواز شریف نے ہر دفعہ اقتدار ملنے کے بعد اداروں کو کمزور کیا، چوہدری شجاعت حسین

مسلم لیگ ق کے سربراہ چوہدری شجاعت حسین نے کہا ہے کہ نواز شریف نے کل کی اپنی تقریر میں دھاندلی کاحوالہ تو دیا لیکن اپنے حق میں کی گئی دھاندلی بھول گئے۔

مسلم لیگ ن کے قائد نواز شریف کی گذشتہ روز اپوزیشن کی آل پارٹیز کانفرنس(اے پی سی) میں کی گئی تقریر پر ردعمل دیتے ہوئے چوہدری شجاعت حسین نے کہا ہے کہ نواز شریف نے ہر دفعہ اقتدار ملنے کے بعد اداروں کو کمزور کیا، انہیں بطور وزیراعظم قومی استحکام پیدا کرنا چاہیے تھا جو انہوں نے نہیں کیا۔
ن لیگ کے دورِ حکومت میں 2 مرتبہ وفاقی وزیر داخلہ رہنے والے چوہدری شجاعت حسین کا کہنا ہےکہ کل اپنی تقریر میں نواز شریف نے دھاندلی کا حوالہ تو دیا لیکن اپنے حق میں کی گئی دھاندلی بھول گئے، نوازشریف نے 1990کے الیکشن میں دن 12 بجے خود ہی نتائج کا اعلان کردیا تھا۔

ان کا کہنا ہےکہ نواز شریف کو قومی احتساب بیورو (نیب) کے چیئرمین پر بات کرنے سے پہلے سوچنا چاہیے تھا کہ ان کی نامزدگی خود انہوں نےکی تھی۔

سربراہ ق لیگ کا مزید کہنا ہے کہ فیصلے نواز شریف نے نہیں بلکہ عوام نے کرنے ہیں، اب عوام دوبارہ بددیانتی کے فیصلوں کو قبول نہیں کریں گے،جن مشیروں نے تقریر لکھی اور کروائی انہوں نے ایک مرتبہ پھر نوازشریف کے پاؤں پر کلہاڑی ماری ہے۔
خیال رہے کہ گذشتہ روز اپوزیشن کی اے پی سی سے بذریعہ ویڈیو لنک خطاب کرتے ہوئے سابق وزیراعظم نواز شریف کا کہنا تھا کہ پاکستان کو ہمیشہ جمہوری نظام سے مسلسل محروم رکھا گیا ہے،انتخابی عمل سے قبل یہ طے کر لیا جاتا ہے کہ کس کو ہرانا کس کو جتانا ہے۔

نواز شریف کاکہنا تھاکہ اگر نتائج تبدیل نہ کیے جاتے تو بے ساکھی پر کھڑی یہ حکومت وجود میں نہ آتی، انتخابات ہائی جیک کرنا آئین شکنی ہے، عوام کے حقوق پر ڈاکہ ڈالنا سنگین جرم ہے،2018 کے عام انتخابات میں دھاندلی کس کے کہنے پر کی گئی؟ اس کا سابق چیف الیکشن کمشنر اور سیکرٹری کو جواب دینا ہو گا اورجو دھاندلی کے ذمہ دار ہیں انہیں حساب دینا ہو گا۔

Advertisement

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *