Categories
Breaking news

نوابشاہ: ڈکیتی کے انداز میں دہشتگردی، مذہبی رہنما جاں بحق

سندھ کے بڑے شہر نواب شاہ میں پیٹرول پمپ کی شاپ پر ڈکیتی کی واردات کا رنگ دے کر مذہبی تنظیم کے رہنما کو دہشت گردی کا نشانہ بنایا گیا، جس میں وہ جاں بحق ہو گئے جبکہ واقعے میں 1 ملزم بھی مارا گیا۔

واقعے کی سی سی ٹی وی فوٹیج نے صورتِ حال واضح کر دی، جس کی بنیاد پر پولیس نے تحقیقات شروع کر دی ہیں۔

پولیس ذرائع کے مطابق نواب شاہ کے پیٹرول پمپ پر شاپ میں گزشتہ رات فائرنگ کی گئی تھی۔

دائیں جانب اوپر چھوٹی تصویر میں دہشت گرد دکان میں فائرنگ کر رہا ہے، نیچے والی تصویر میں وہ اپنے ساتھی کی گولی کا نشانہ بن کر گرتا ہے، بائیں تصویر ہلاک دہشت گرد کی ہے — جنگ فوٹو
دائیں جانب اوپر چھوٹی تصویر میں دہشت گرد دکان میں فائرنگ کر رہا ہے، نیچے والی تصویر میں وہ اپنے ساتھی کی گولی کا نشانہ بن کر گرتا ہے، بائیں تصویر ہلاک دہشت گرد کی ہے — جنگ فوٹو

فائرنگ سے مالک سلیم رحمانی جاں بحق اور ان کے بھائی وسیم رحمانی شدید زخمی ہوئے تھے۔

ابتدائی طور پر اسے ڈکیتی کی واردات قرار دیا گیا تھا مگر واقعے کی سی سی ٹی وی فوٹیج سے صورتِ حال واضح ہو گئی ہے کہ یہ دہشت گردی کا واقعہ تھا جس میں ایک مذہبی تنظیم کے مقامی رہنما کو نشانہ بنایا گیا جس میں وہ جاں بحق ہو گئے۔

نوابشاہ: پسند کی شادی کرنیوالے میاں بیوی قتل

سندھ کے شہر نواب شاہ میں ایک اور جوڑا غیرت کے نام پر بھینٹ چڑھ گیا، پسند کی شادی کرنے والے میاں بیوی کو قتل کر دیا گیا۔

واقعے کی سی سی ٹی وی فوٹیج میں دیکھا جا سکتا ہے کہ شاپ پر لوٹ مار نہیں کی گئی بلکہ مسلح دہشت گرد نے اسٹور میں داخل ہوتے ہی فائرنگ شروع کر دی تھی۔

مسلح شخص کے ساتھی کی فائرنگ سے اس کا اپنا ہی ساتھی دہشت گرد ہلاک ہو گیا تھا۔

ہلاک دہشت گرد کی شناخت واجد میمن کے نام سے ہوئی ہے جس کا تعلق کالعدم سندھ ریولوشنری آرمی (ایس آر اے) سے ہے۔

قومی خبریں سے مزید

Original Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *