Categories
Breaking news

نافرمانی کا الزام، پارلیمانی بیورو کے ممبر جوسیپ کا ٹرائل شروع

Advertisement
Advertisement

بارسلونا (محمد نبی) بدھ کے روز اسپین کی سپریم کورٹ نے پارلمانی بیرو کے ممبر جون جوسیپ کے خلاف مقدمے کی سماعت شروع کر دی گئ۔ ان پر الزام ہے کہ انہوں نے 2017 میں خود مختاری اور آزادی کے ووٹنگ میں معاونت کی اور ووٹ ہونے دی۔
ہسپانوی حکومت کی طرف سے کیس کی پیروی کرنے والے اٹارنی جنرل اور سالیسیٹر جنرل دونوں کا مطالبہ ہے کہ جوسیپ کو 20 ماہ کے لئے نا اہل قرار دے دیا جائے تاکہ وہ سرکاری عہدہ نہ رکھ سکیں اور ساتھ ہی ان کو €24,000 جرمانہ کیا جائے۔ تاہم فی الحال جیل کی سزا کو موقوف رکھا جائے۔ جبکہ سخت گیر دائیں بازو کی جماعت “ووکس” کا مطالبہ ہے کہ 12 سال جیل کی سزا دی جائے۔
شنید ہے کہ جوسیپ پر فرد جرم عائد ہوگا۔ ان کے ساتھیوں کو اسی طرح کے مقدمات کا سامنا ہے۔

Advertisement

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *