Categories
Breaking news

نارتھ کراچی میں پی ایس پی کارکن کا قتل، تحقیقات میں پیش رفت

نارتھ کراچی میں پی ایس پی کارکن کا قتل، تحقیقات میں پیش رفت

نارتھ کراچی میں فائرنگ کے واقعے میں پاک سرزمین پارٹی (پی ایس پی) کارکن کے قتل کی تحقیقات میں پیش رفت سامنے آئی ہے۔

تفتیشی حکام کا کہنا ہے کہ واردات میں دو نائن ایم ایم پستول استعمال کیے گئے، دونوں ہتھیار اس سے قبل کسی واردات میں استعمال نہیں کیے گئے۔

تفتیشی حکام کا کہنا ہے کہ کیس سے متعلق تکنیکی ڈیٹا حاصل کیا جارہا ہے، پورے روٹ کی سی سی ٹی وی ویڈیوز بھی دیکھ رہے ہیں۔

تفتیشی حکام کا کہنا ہے کہ مقتول کے سوشل میڈیا پروفائل سے بھی کچھ معلومات ملی ہیں، گزشتہ دنوں مقتول کے کچھ جھگڑے بھی ہوئے تھے۔

واضح رہے دو روز قبل 10 فروری کو نارتھ کراچی میں کار پر فائرنگ سے ایک شخص جاں بحق اور اس کا بیٹا زخمی ہوگیا تھا۔

ڈسٹرکٹ سینٹرل کے سینئر سپرنٹنڈنٹ پولیس معروف عثمان کے مطابق فائرنگ کا واقعہ نارتھ کراچی میں پیلا اسکول کے قریب پیش آیا۔

پولیس کے مطابق اسکول کے قریب ایک کار نمبر اے ٹی کے 173 پر موٹر سائیکل سوار ملزمان نے فائرنگ کی، جس کے نتیجے میں کار میں سوار سلمان عرف کمانڈو جاں بحق جبکہ کار میں موجود خاتون بال بال بچ گئیں اور ایک بچہ پاؤں میں گولی لگنے سے زخمی ہوا۔

ایس ایس پی معروف عثمان نے عینی شاہدین کے حوالے سے بتایا ہے کہ 3 ملزمان 2 موٹر سائیکلوں پر سوار تھے، جن میں سے 1 ملزم نے اندھا دھند فائرنگ کی۔

پولیس کے مطابق جائے وقوع سے پستول کے 8 خول برآمد ہوئے ہیں، 36 سالہ مقتول سلمان گریڈ 16 میں پرائمری اسکول ٹیچر تھا۔

نارتھ کراچی میں کارکن کے قتل پر ارشد وہرہ کا موقف سامنے آگیا

پاک سرزمین پارٹی (پی ایس پی ) کے رہنما ارشد وہرہ کا کہنا ہے کہ قتل کیا جانے والا ان کا سر گرم کارکن ہے۔

پولیس کے مطابق سلمان اپنی بیوی اور بچے کے ساتھ جا رہا تھا کہ نامعلوم موٹرسائیکل سواروں کا نشانہ بن گیا، سلمان اپنے بیٹے عبدالصبور کو اسکول سے لینے آیا تھا۔

ملزمان کی جانب سے کار پر کی فائرنگ کے نتیجے میں مقتول کے چہرے سر اور جسم کے دیگر حصوں پر گولیاں لگی تھیں۔

فائرنگ سے مقتول کی اہلیہ محفوظ رہی، ملزمان نے سلمان کو باقاعدہ ٹارگٹ کر کے قتل کیا۔

قومی خبریں سے مزید

Original Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *