Categories
Breaking news

مودی کا مقبوضہ کشمیر میں جمہوریت کا دعویٰ مسترد، دفترِ خارجہ کا بیان جاری

Advertisement

ترجمان دفتر خارجہ

پاکستان نے بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی کا مقبوضہ کشمیر میں جمہوریت کا دعویٰ مسترد کر دیا۔

ترجمان دفتر خارجہ نے کہا ہے کہ بی جے پی کے جمہوریت کے دعوے کا مقصد کشمیریوں کی آواز کو دبانا ہے، اس لیے بھارتی وزیر اعظم کے جھوٹے دعوے کو مسترد کرتے ہیں۔

ترجمان کا کہنا تھا جموں و کشمیر میں جمہوریت کے دعوے بے بنیاد اور جھوٹ پر مبنی ہیں، بی جے پی کی نام نہاد جمہوریت بندوق کے زور پر کشمیریوں کی آواز دبانے کے لیے ہے۔

ترجمان نے کہا مقبوضہ کشمیر میں 5 اگست 2019 سے کشمیریوں کو بنیادی حقوق سے محروم رکھا گیا ہے، بھارتی قیادت کے جھوٹے دعوے عالمی برادری کی توجہ نہیں ہٹا سکتے۔

Advertisement

دفتر خارجہ کے ترجمان نے مزید کہا کہ بھارت عالمی برادری کی توجہ ہٹانے کی بجائے مقبوضہ کشمیر سے غیر قانونی قبضہ ختم کرے، اور کشمیریوں کو یو این کی قراردادوں کے مطابق حق رائے دہی دیا جائے۔

RSS-BJP brand of ‘democracy’ only means muzzling of Kashmiri voice & will under bayonets of Indian army guns.
The ‘new chapter’ that RSS-BJP regime is writing in #IIOJK is one marked by brutal military siege since 5 Aug & egregious HR violations.1/2
? https://t.co/1MUSCiTHvg

— Spokesperson ?? MoFA (@ForeignOfficePk) December 26, 2020

Advertisement

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *