Categories
Breaking news

ملالہ کی امریکی وزیر خارجہ سے ملاقات، افغان خواتین کے حقوق کا معاملہ اٹھایا

ملالہ کی امریکی وزیر خارجہ سے ملاقات، افغان خواتین کے حقوق کا معاملہ اٹھایا

طالبان کے کابل پر کنٹرول کے بعد افغان خواتین کے حقوق کے لیے ملالہ یوسفزئی نے امریکی وزیر خارجہ اینٹنی بلنکن سے خصوصی ملاقات کی۔جہاں ملالہ نے افغانستان میں خواتین اور لڑکیوں کی تعلیم اور ملازمت کے حق کے لیے ضروری اقدامات پر زور دیا ہے۔ نوبل انعام یافتہ ملالہ نے کہا کہ افغان لڑکیاں اس وقت کالج یونیورسٹی سطح…

سیکریٹری بلنکن سے ملاقات کے دوران ملالہ نے 15 سالہ افغان لڑکی کا خط بھی با آواز بلند پڑھ کرسنایا، جس میں لکھا گیا تھا کہ جتنا لمبے عرصے تک تعلیمی اداروں کے دروازے خواتین پر بند رہیں گے، ایک بہتر مستقبل کی ہماری امیدیں اتنی ہی دم توڑتی جائیں گی۔

خط میں مزید لکھا گیا تھا کہ امن اور تحفظ کے لئے خواتین کی تعلیم اہم ہے۔ خواتین کے تعلیم جاری نہ رکھنے کا اثر افغانستان پر بھی پڑے گا۔ بطور ایک انسان میں آپ کو یہ بتانا چاہتی ہوں کہ دنیا کے کسی بھی دوسرے انسان کی طرح میرے بھی حقوق ہیں۔

Today I met @Malala, whose story and voice have encouraged women and girls everywhere to stand boldly in their strength and purpose. We discussed the role of girls’ education and how investing in women and girls creates a brighter future. Thank you, Malala, for all that you do. pic.twitter.com/9wmcUaj9XX

— Secretary Antony Blinken (@SecBlinken) December 6, 2021

ملالہ نے زور دیا کہ امریکہ اقوام متحدہ کے ساتھ مل کرخواتین کے سکول اور ملازمت پر جانا یقینی بنائے، اور انسانی بنیادوں پر اس کے لئے ضروری امداد فراہم کرے۔

ملاقات سے پہلے امریکی وزیر خارجہ بلنکن نے صحافیوں کے سامنے ملالہ یوسفزئی کو خوش آمدید کہتے ہوئے تعلیم کے میدان میں ان کے کام کو قابل تقلید قرار دیا۔

ان کا کہنا تھا کہ امریکہ اور صدر بائیڈن کے لئے خواتین اور لڑکیوں کی تعلیم اہم معاملہ ہے اور ملالہ جس طرح اپنے کام سے تبدیلی لا رہی ہیں اور نوجوان لڑکیوں اور خواتین کی تعلیم کے لئے راہ ہموار کر رہی ہیں وہ مشعلِ راہ ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.