Categories
Breaking news

فیصل آباد: نوجوان نے منگنی تڑوانے والے کے بچے کو قتل کر دیا

Advertisement

پنجاب کے صنعتی شہر فیصل آباد میں خود کو برسرِ روزگار ظاہر کر کے منگنی کرنے والے نوجوان نے بھانڈا پھوٹنے کے بعد منگنی ٹوٹنے کی رنجش پر حقیقت سامنے لانے والے شخص کے 7 سالہ بیٹے کو اغواء کر کے قتل کر دیا اور اس کی لاش پانی کے جوہڑ میں پھینک دی۔

پولیس نے بچے کی لاش برآمد کر کے ملزم کو گرفتار کر لیا ہے۔

بچے سے زیادتی و قتل کے مجرم کو 3 بار سزائے موت و عمر قید

عدالت نے گواہوں کے بیانات اور وکلا کے دلائل کے بعد ملزم پر جرم ثابت ہونے پر اس کو تین بار سزائے موت کی سزا سنا دی۔

پولیس ذرائع کے مطابق واقعہ جڑانوالہ کے علاقے میں پیش آیا جہاں ایک نوجوان یاسین نے خود کو برسرِروزگار ظاہر کر کے منگنی کی تھی۔

یاسین کے سسرالیوں نے جب اس کے ایک جاننے والے ندیم سے تصدیق کی تو اس نے یاسین کی حقیقت بتا دی کہ وہ کوئی کام نہیں کر تا جس پر اس کی منگنی ٹوٹ گئی۔

منگنی ٹوٹنے کی رنجش پر ملزم نے ندیم کے 7 سالہ بیٹے کو اغواء کر نے کے بعد قتل کر دیا اور لاش پانی کے جوہڑ میں پھینک دی۔

یہ بھی پڑھیے

پولیس نے بچے کی گمشدگی کے 5 روز بعد جب شبہ ہونے پر ملزم کو پکڑ کر تفتیش کی تو ملزم نے بچے کے قتل کا اعتراف کرتے ہوئے پانی کے ایک جوہڑ سے بچے کی لاش برآمد کروا دی۔

بچے کی لاش کو پولیس نے پوسٹ مارٹم کے لیے اسپتال منتقل کر دیا ہے اور ملزم کے خلاف مقدمہ درج کر لیا ہے۔

قومی خبریں سے مزید

Original Article

Advertisement

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *