Categories
Breaking news

عمران خان پر قاتلانہ حملے کی تحقیقات ایک بار پھر کھٹائی میں پڑ گئی

عمران خان پر قاتلانہ حملے کی تحقیقات ایک بار پھر کھٹائی میں پڑ گئی

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین عمران خان پر ہونے والے قاتلانہ حملے کی تحقیقات ایک بار پھر کھٹائی میں پڑگئی۔

سروسز ٹریبونل کا لاہور پولیس چیف غلام محمود ڈوگر کو دیا گیا اسٹے آرڈر واپس لینے سے لاہور پولیس چیف پھر معطل ہوگئے ہیں اور معطل افسر جے آئی ٹی کی سربراہی نہیں کرسکتا۔

لاہور پولیس چیف غلام محمود ڈوگر کی معطلی کا نوٹیفکیشن بحال کردیا گیا

فیڈرل سروس ٹربیونل نے وفاقی حکومت کی لارجر بینچ بنانے کی استدعا منظور کرلی۔

غلام محمود ڈوگر نے 5 نومبر کی وفاقی حکومت کی معطلی کیخلاف سروسز ٹریبونل سے اسٹے لے لیا تھا۔

معطلی کے خلاف اسٹے کے دوران پنجاب حکومت نے غلام محمود ڈوگر کو عمران خان پر حملے کی جے آئی ٹی کا سربراہ بنادیا تھا۔

سروسز ٹریبونل کی جانب سے اسٹے واپس لینے سے سی سی پی او لاہور کی معطی کا نوٹیفکیشن بحال ہوگیا، یوں جے آئی ٹی متنازع ہوگئی۔

عمران خان پر قاتلانہ حملے کی جوائنٹ انویسٹی گیشن ٹیم کے افسران تذبذب کا شکار ہیں، کیونکہ کوئی بھی معطل افسر جوائنٹ انویسٹی گیشن ٹیم کا سربراہ نہیں ہوسکتا۔

قانونی ماہرین کا کہنا ہے کہ غلام محمود ڈوگر اب معطل ہیں، وہ جے آئی ٹی کے سربراہ نہیں رہ سکتے۔

قومی خبریں سے مزید

Original Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *