Categories
Breaking news

سعودی عرب میں مقیم پاکستانی ڈاکٹر نے انسانیت کی اعلیٰ مثال قائم کردی

Advertisement

پاکستانی ڈاکٹر نذیر احمد خان

سعودی دارالحکومت ریاض میں63 برس سے رہائش پذیر پاکستانی ڈاکٹر کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئی ہے، انہوں نے خود کو سعودی عوام کی فلاح و بہبود اور خدمت کیلئے وقف کردیا ہے۔

Advertisement

پاکستانی ڈاکٹر نذیر احمد خان شکل و صورت، رہن سہن، بول چال اور زندگی بسر کرنے کے لحاظ سے سعودی معاشرے کا اٹوٹ حصہ بن گئے ہیں۔ سعودی ذرائع ابلاغ کے مطابق پاکستانی ڈاکٹر نذیر احمد خان کا ویڈیو کلپ سرکاری رابطہ مرکز نے سوشل میڈیا پر شیئرکیا ہے۔

نذیر احمد خان اپنی ویڈیو میں بتا رہے ہیں کہ وہ ریاض کے تین بڑے کلینکس میں سے ایک کے ڈائریکٹر رہے ہیں۔ ریاض میں الفوطہ ، مسجد العید اور المرقب نام کے تین پولی کلینک ہوتے تھے۔ ان میں سے ایک وہ ڈائریکٹر تھے۔

نذیر احمد خان نے سعودی عرب کے حوالے سے یادوں کا تذکرہ کرتے ہوئے کہا کہ یہ ملک انصاف، رحم دلی اور خیر پسندی سے آباد ہے اور میں اپنی آخری سانس تک اس کی خدمت کرتا رہوں گا۔

نذیر احمد خان نے کہا کہ ایک زمانے سے میرے کلینک میں جوان بوڑھے اور بچے سب ہی اپنا طبی معائنہ کرانے آتے ہیں، ان سے معائنہ فیس تیس ریال وصول کی جاتی ہے۔

انہوں نے بتایا کہ یہ فیس انہوں نے شاہ فیصل کے زمانے میں مقرر کی تھی تب سے اب تک اسی پر قائم ہیں۔اور آج بھی 30 ریال سے زیادہ فیس نہیں لیتے۔

#همة_حتى_القمة | 60 عامًا في #المملكة و30 ريالًا للكشف، الطبيب نذير أحمد خان، يروي البدايات وكيف أصبح جزءًا من نسيج المجتمع. #التواصل_الحكومي pic.twitter.com/6SUr4jaXGM

— التواصل الحكومي (@CGCSaudi) September 19, 2020

Advertisement

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *