Categories
Breaking news

ریکوڈک کیس، پاکستانی اداروں کے اثاثے منجمد کرنے کی کارروائی شروع

ریکوڈک کیس، پاکستانی اداروں کے اثاثے منجمد کرنے کی کارروائی شروع

ریکوڈک کیس میں پاکستانی اداروں کے اثاثے منجمد کرنے کی کارروائی شروع ہو گئی۔

Advertisement

برٹش ورجن آئی لینڈ ہائی کورٹ نے ٹیتھیان کاپر کمپنی کی درخواست پر عبوری حکم جاری کر دیا۔

Table of Contents

x
Advertisement

عبوری حکم کے تحت پاکستانی اداروں کے اثاثے منجمد کرنے کا حکمِ امتناع جاری کیا گیا ہے۔

پاکستان نے 898 ارب 80 کروڑ روپے جرمانے کے خلاف اکسڈ سے مشروط حکمِ امتناع لیا تھا۔

ریکوڈک تنازع، پاکستانی معیشت کیلئے ایک بڑا خطرہ

بلوچستان کے علاقے چاغی میں واقع ریکوڈک کے پہاڑوں…

مشروط حکمِ امتناع کے تحت پاکستان کو ڈیڑھ ارب ڈالر غیر ملکی بینک میں جمع کرانے تھے۔

حکمِ امتناع کی مدت ختم ہونے پر پاکستانی اثاثے منجمد کرنے کی درخواست برٹش ورجن آئی لینڈ میں دی گئی۔

حکمِ امتناع کے تحت پاکستان کو غیر ملکی بینک میں ڈیڑھ ارب ڈالر کی بینک گارنٹی جمع کرنا ضروری تھا۔

یہ حکمِ امتناع برٹش ورجن آئی لینڈ ہائی کورٹ نے 16 دسمبر 2020ء کو جاری کیا۔

اس حوالے سے اٹارنی جنرل آفس کا کہنا ہے کہ برٹش ورجن آئی لینڈ ہائی کورٹ نے پاکستان کو سنے بغیر اثاثے منجمد کرنے کا حکم دیا۔

اٹارنی جنرل آفس کا یہ بھی کہنا ہے کہ حکومتِ پاکستان ہر ممکن وسائل بروئے کار لاتے ہوئے پاکستان کے مفادات کا دفاع کرے گی۔

واضح رہے کہ پاکستان نے 898 ارب 80 کروڑ روپے جرمانے کے خلاف اکسڈ سے مشروط حکمِ امتناع لیا تھا۔

قومی خبریں سے مزید

Original Article

Advertisement

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *