Categories
Breaking news

ریموٹ ورک وبا کے بعد بھی بدستور جاری رہے گا، گھروں میں رہ کر کام کرنے والوں کی شرح جانئے

بارسلونا (محمد نبی) اسٹیٹ آف الارم کے بعد کاتالونیا کئی ایک پابندیاں ختم کرنے جا رہا ہے۔ ماہرین کا خیال ہے کہ ریموٹ ورک یا دفاتر کے بجائے گھروں میں بیٹھ کر کا کا سلسلہ بدستور جاری رہے گا۔ انہیں لگتا ہے کہ ورک فرام ہوم وبا کے خاتمے تک یا اس کے بعد بھی اسی طرح ہوتا رہے گا۔ قانون دان پیرے ویدال نے کاتالان نیوز ایجنسی کو بتایا کہ حفاظتی اقدام کے طور پر ماسک کا استعمال بھی اس وقت تک جاری رہے گا جب تک صحت کے حکام فیصلہ نہیں کر لیتے کہ وبا ختم ہو چکی ہے۔

ماہرین کا خیال ہے کہ کمپنیاں چاہیں گی کہ وبا ختم ہونے پر دفاتر میں کام کا سلسلہ شروع ہو۔ تاہم طویل مدت کے لئے وہ جزوی طور پر ریموٹ ورکنگ شیڈول کی طرف جائیں گے۔ آئی ای ایس ای بزنس اسکول کی پروفیسر ماریہ لاس ہیراس کے مطابق ورکرز 20 سے لے کر 60 فیصد وقت گھروں میں گزاریں گے۔ تاہم یونین نے خبردار کیا ہے کہ گھروں سے کام کرنے والے افراد کی تعداد ان آراء کے برعکس کم ہے۔

نیشنل انسٹیٹوٹ آف سٹیٹسٹکس کے ایک سروے میں کہا گیا ہے کہ اسپین میں کورونا وبا سے پہلے صرف 4 فیصد آبادی گھروں سے کام کرتی تھی۔ جب صحت بحران اپنے عروج پر تھا تو یہ شرح بڑھ کر 20 سے 30 فیصد ہو گئی تھی۔ اب حالات کسی قدر مستحکم ہونے کے بعد 11 فیصد ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *