Categories
Breaking news

رابطہ کرنا بند کریں،اب لانگ مارچ ہوگا،اسلام آباد ہم آرہے ہیں،سلیکٹڈ وزیراعظم کا استعفی لیکر رہیں گے: بلاول بھٹو زرداری

Advertisement

رابطہ کرنا بند کریں،اب لانگ مارچ ہوگا،اسلام آباد ہم آرہے ہیں،سلیکٹڈ وزیراعظم کا استعفی لیکر رہیں گے: بلاول بھٹو زرداری

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن) پیپلز پارٹی کےچیئرمین بلاول بھٹو زرداری نےکہاہےکہ ہم نےجانوں کی قربانی دی ہے،اس جمہوریت کی بنیادوں میں ہماراخون شامل ہے،اب کوئی راستہ نہیں ہے، ڈائیلاگ شائیلاگ کا وقت گزر چکا ہے،ہم کٹھ پتلی اوراس کے سہولت کاروں کوللکاررہےہیں،حکومت فون کرنا بند کرے ،اب لانگ مارچ ہوگا،اسلام آباد ہم آرہے ہیں،اسلام آباد پہنچ کر جعلی، نالائق وزیراعظم کا استعفے چھین کرر ہیں گے،ہمارے درمیان کوئی دارڈ پیدا نہیں ہوسکتی،ہم کٹھ پتلی کو بھگائیں گے۔

پی ڈی ایم کے مینار پاکستان لاہور جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے بلاول بھٹو زرداری کا کہنا تھا کہ ہم سیاسی اختلافات ختم کرکے پی ڈی ایم پلیٹ فارم پر کھڑے ہیں،پی ڈی ایم اس مزاحمت کی کڑی ہےجو بینظیر بھٹو نے شروع کی تھی، ہم عوام کو حق حکمرانی دلانا چاہتے ہیں،عوام کے خلاف ہمیشہ سازش کی گئی، یہ جنگ آپ سب کی جنگ ہے ، یہ جنگ اقتدارکی جنگ نہیں ہے، غریب کوروٹی کپڑااورمکان دلانےکی جنگ ہے،روشنیوں کےشہرمیں مایوسی کےاندھیرے ہیں،ظلم وجبر کی رات ختم ہونے والی ہے،پیپلزپارٹی پسے ہوئے طبقات کی پارٹی تھی اور رہے گی۔انہوں نے کہا کہ دھمکی اور گالم گلوچ کے علاوہ حکومت کے پاس کچھ نہیں ہے،نہ انکو تاریخ کا علم ہے،ہم کسی دھمکی ،کسی آمر سے نہ ڈرے ہیں نہ ڈریں گےہم کشتیاں جلا کر نکلے ہیں،غریب کا چولہا بند ہے،دکاندار کا شٹر بند ہے،ٹرانسپوٹرز کا پہیہ جام ہے،جعلی حکمرانوں کو عوام کو درد محسوس نہیں ہوتا،یہ کسی کے اشارے اور ایمپائر کی انگلی کی وجہ سے اقتدار میں آئے ہیں، پنجاب سے مذاق کیا جارہا ہے،پنجاب جو ملک کا سب سے بڑا صوبہ ہے،نالائق ،نااہل وزیراعظم نے پنجاب کی پگ ایک کٹھ پتلی کے سر پر رکھی ہے کیا یہ لاہور کو قبول ہے؟کیا یہ پنجاب کو قبول ہے؟۔

زندہ دلان لاہورآج پی ڈی ایم کی منفی سیاست کومستردکردینگے، وزیراعلیٰ پنجاب

بلاول بھٹو زرداری کا کہنا تھا کہ میں پارلیمنٹ میں صوبوں کے حقو ق کی بات کرتا ہوں،اس حکومت کو نہ عوام کی فکر ہے نہ پنجاب کی فکر ہے ،مہنگائی سے مارے لوگ ہمارے دست و بازو بن گئے ہیں،ان حکمرانوں میں سچ سننے کا حوصلہ نہیں ہے،شہباز شریف جیل میں ہیں،خورشید شاہ صاحب جیل میں ہیں یہ کراچی اور لاہور کا مطالبہ ہے کہ شہباز شریف اور خورشید شاہ کو رہا کرو، کسان اپنا حق مانگے تو سر عام شہید کردیا جاتا ہے،ڈاکٹر حق مانگے تو لاٹھی چارج،طلباءحق مانگیں تو پولیس گردی کی جاتی ہے،یہ ووٹ سےنہیں کسی اورکےاشارےسےاقتدارمیں آئے ہیں،جعلی،ناجائزاورنااہل حکمرانوں کےدامن میں جھوٹ کےسواکچھ نہیں۔

Advertisement

24گھنٹوں میں کورونا سے مزید 72 اموات ،3 ہزار 369 نئے کیسز رپورٹ

بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ پیپلز پارٹی پسے ہوئے طبقات کی جماعت ہے،ہم کٹھی پتلی کے سہولت کاروں کو للکار رہے ہیں،یہ جنگ اقتدار کی جنگ نہیں ہے ،یہ غریب کو روٹی ،کپڑا اور مکان دلانے کی جنگ ہے۔شہید ذوالفقار علی بھٹو نے پیپلز پارٹی کی بنیاد لاہور میں رکھی،بی بی شہید نے اپنے سفر کا آغاز لاہور سے کیا تھا،یقین دلاتاہوں آپ کی جیت جلدہونے والی ہے،جب عوام تحریک کااس حدتک ساتھ دیتےہیں توظلم کی زنجیریں کٹ جاتی ہیں۔انہوں نے تقریر کے دوران اپنے شہید کارکنوں اور جہانگیر بدر کاخصوصی طور پر ذکر کیا۔تقریر کے آخر میں بلاول بھٹو زرداری کا کہنا تھا کہ لاہور پر ڈاکہ،پنجاب پر ڈاکہ،جمہور پر ڈاکہ،دستور پر ڈاکہ، ووٹ پر ڈاکہ ،پاکستان پر ڈاکہ نامنظور۔

پشاور کے مزید4 علاقوں میں سمارٹ لاک ڈاﺅن لگا دیاگیا

مزید :

قومیBreaking Newsاہم خبریں

Original Article

Advertisement

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *