Categories
Breaking news

دہشتگردوں نے انسداد دہشتگردی عدالت کے جج کو بیوی بچوں سمیت قتل کردیا

Advertisement
Advertisement

دہشتگردوں نے انسداد دہشتگردی عدالت کے جج کو بیوی بچوں سمیت قتل کردیا

صوابی(ڈیلی پاکستان آن لائن) نامعلوم دہشت گردوں نے صوابی انٹرچینج پرانسداد دہشتگردی عدالت کےجج آفتاب آفریدی کواہلیہ اور دو بچوں سمیت اندھا دھند فائرنگ کر کے شہید کردیا ، دہشت گرد فائرنگ کے بعد با آسانی فرار ہو گئے جبکہ واقعہ کی اطلاع ملتے ہی اعلی حکام جائے وقوعہ پر پہنچ گئے ہیں ،سیکیورٹی فورسز اور پولیس نے پورے علاقے کو گھیرے میں لیتے ہوئے سرچ آپریشن شروع کردیا ہے۔

پاکستان اور جنوبی افریقہ کے درمیان دوسرا ون ڈے آج کھیلا جائے گا

تفصیلات کے مطابق صوابی انٹر چینج پر دہشت گردی کا بڑا واقعہ پیش آیا ہے جہاں نامعلوم کار سوار دہشت گردوں نے انسداد دہشتگردی عدالت کےجج آفتاب آفریدی کواہلیہ اور دو بچوں سمیت اندھا دھند فائرنگ کر کے شہید کردیا ،جج آفتاب آفریدی سوات سے اپنے اہل خانہ کے ہمراہ صوابی آ رہے تھے کہ انٹرچینج پر دہشت گردوں نے ان کی گاڑی پر حملہ کردیا ،دہشت گردوں کے حملے میں گاڑی میں موجود جج آفتاب آفریدی ان کی اہلیہ، ایک اور خاتون اور بچی سمیت چار افراد جاں بحق جب کہ دو افراد زخمی ہوئے ہیں جن میں گن مین اور ڈرائیور شامل ہیں۔دشہت گردی کا یہ افسوسناک واقعہ انبار انٹرچینج سے دس کلومیٹر آگے پیش آیا ہے۔ موٹر وے کی مین لائن پر دوسری جانب کی لائن سے گاڑی پر حملہ ہوا ہے،واقعہ کی اطلاع ملتے ہی آئی جی خیبر پختونخوا اور دیگر حکام جائے وقوعہ پرپہنچ گئے ہیں ۔

پاکستان سب کا ہے، سب کو برابر کے حقوق حاصل ہیں، وزیر اعلیٰ عثمان بزدارکا ایسٹرکے موقع پر مسیحی برادری کیلئے پیغا م

مزید :

اہم خبریںقومیعلاقائیخیبرپختون خواہصوابیBreaking News

Original Article

Advertisement

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *