Categories
Breaking news

خاتون خودکش حملہ آور جامعہ کراچی کیسے پہنچی؟

خاتون خودکش حملہ آور جامعہ کراچی کیسے پہنچی؟

تفتیشی حکام نے کہا ہے کہ خود کش حملہ آور خاتون نے جامعہ کراچی میں آنے کے لیے ممکنہ طور پر رکشے کا استعمال کیا ہے۔

جامعہ کراچی خود کش حملے کے حوالے سے تفتیشی حکام کا کہنا ہے کہ خاتون خودکش حملہ آور نے جامعہ کراچی میں داخلے کےلیے مسکن گیٹ کا راستہ استعمال کیا۔

جامعہ کراچی خودکش دھماکے کی CCTV فوٹیج سامنے آگئی

شعبہ کے باہر ایک لڑکی کو کھڑے دیکھا جا سکتا ہے۔ جونہی ہائی ایس گاڑی لڑکی کے قریب پہنچی ہے تو خاتون خود کو دھماکے سے اُڑا لیتی ہے۔

تفتیشی حکام کے مطابق ممکنہ طور پر خاتون جامعہ کراچی میں دوپہر 1 بج کر 56 منٹ پر داخل ہوئی، نمبر پلیٹ سے رکشے کی تلاش کی جارہی ہے۔

اس سے قبل تحقیقاتی اداروں کو جامعہ کراچی میں ہونے والے خود کش بم دھماکے پر بم ڈسپوزل اسکواڈ (بی ڈی ایس) کی رپورٹ موصول ہوئی۔

رپورٹ کے مطابق دھماکے میں 3 سے 4 کلو ہائی ایکسپلوزیو بارودی مواد استعمال کیا گیا ہے۔

بی ڈی ایس رپورٹ کے مطابق دھماکے کے لیے بڑی مقدار میں اسٹیل بال بیرنگ کا استعمال بھی کیا گیا ہے۔رپورٹ کے مطابق خود کش حملہ آور خاتون نے ایک میٹر کے فاصلے سے خود کش حملہ کیا، خود کش بمبار کے جسمانی اعضا اور برقعے کے حصے حاصل کیے ہیں۔

قومی خبریں سے مزید

Original Article

Leave a Reply

Your email address will not be published.