Categories
Breaking news

جی 20 ممالک کا ہنگامی اجلاس آن لائن منعقد، غریب ممالک کو بڑا ریلیف دے دیا گیا

Advertisement

جی 20 ممالک کا اجلاس

جی 20 ممالک کے وزرائے خزانہ نے غریب ممالک کو بڑا ریلیف دیتے ہوئے ان کے لیے قرض سروسز کو 2021 تک معطل کر دیا ہے۔

جی ٹوئنٹی کے وزرائے خزانہ اور سینٹرل بینکوں کے گورنرز نے غریب ملکوں پر قرض سروسز کی ادائیگی 2021 تک معطل کرنے پر اتفاق کر لیا ہے۔

سعودی میڈیا کے مطابق اجلاس نے ادائیگی کے سلسلے میں معطلی کے سابق فیصلے میں توسیع کی ہے، سعودی عرب کی صدارت میں یہ ہنگامی اجلاس آن لائن منعقد کیا گیا جس کے اختتام پر مشترکہ اعلامیہ جاری کیا گیا ہے۔

اعلامیے میں یہ کہا گیا ہے کہ قرضوں کا مسئلہ حل کرنے کے لیے مزید اقدامات درکار ہوں گے، قرضہ سروسز کی ادائیگی معطل کرنے کے سلسلے میں ہر ملک کے ساتھ خصوصی معاملہ درکار ہوگا۔

اجلاس میں کہا گیا کہ کورونا بحران کا حجم غیر معمولی ہے اور قرضوں سے بہت سارے مسائل پیدا ہو رہے ہیں، کم آمدنی والے کئی ممالک کے یہاں مستقبل تاریک ہوتا جا رہا ہے۔ جی 20 کے وزرائے خزانہ نے اطمینان دلایا کہ قرضہ سروسز کی ادائیگی کو معطل کرنے والے پروگرام پر عمل درآمد کر رہے ہیں اور آئندہ بھی کرتے رہیں گے۔

اجلاس میں قرضہ دینے والے ممالک سے کہا گیا کہ وہ مکمل شفافیت کا مظاہرہ کریں، اور یہ کہا گیا کہ قرضہ سروسز کے سلسلے میں کارروائی قرضہ لینے والے ملک کی درخواست پر ہوگی۔ اعلامیے کے مطابق مذکورہ ریلیف کے سلسلے میں بنیادی اصول قرضہ دینے والے ادارے طے کریں گے، قرضوں کا بوجھ تقسیم کرنے کا واضح نظام بھی وضع کیا جائے گا۔

واضح رہے کہ ڈیبٹ سروس معطلی اقدام (DSSI) کا اعلان یورپ میں وبائی امراض کے ابتدائی دنوں کے دوران اپریل میں کیا گیا تھا۔

Advertisement

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *