Categories
Breaking news

توہینِ عدالت کیس: جنگ گروپ کے صحافیوں پر فردِ جرم عائد کرنے پر AEMEND کا بھی اظہارِ تشویش

ایسوسی ایشن آف الیکٹرونک میڈیا ایڈیٹرز اینڈ نیوز ڈائریکٹرز (AEMEND) نے بھی توہینِ عدالت کیس میں جنگ گروپ کے صحافیوں پر فردِ جرم عائد کرنے پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔

اپنے بیان میں ایمینڈ نے کہا ہے کہ صحافیوں پر لگائے گئے چارجز پریشان کن ہیں کیونکہ صحافیوں نے ایک حلف نامے کو رپورٹ کیا تھا جو نہ صرف موجود ہے بلکہ تصدیق شدہ بھی ہے۔

توہینِ عدالت کیس: جنگ گروپ کے صحافیوں پر فردِ جرم عائد کرنے پر APNS کا اظہارِ تشویش

ایک بیان میں اے پی این ایس نے کہا کہ تصدیق شدہ بیان شائع کرنا بین الاقوامی طور پر تسلیم شدہ اصولوں اور صحافتی معیار پر مبنی ہے۔

ایسوسی ایشن کا کہنا ہے کہ معزز عدالت کے حکم نامہ سے آزادی اظہارِ رائے پر اثرات مرتب ہوں گے، جس کی ساکھ پہلے ہی عالمی پریس فریڈم انڈیکس رپورٹ 2021 کے تناظر میں خراب ہے۔

اس کا کہنا تھا کہ صحافیوں کی جانب سے دی گئی رپورٹ قانونی ہے کیونکہ پہلے سے ثابت شدہ رپورٹ کے پیچھے ان صحافیوں کے کوئی مذموم مقاصد نہیں تھے۔

ایمینڈ کا کہنا تھا کہ آزادی اظہار رائے اور لوگوں کے جاننے کے حق کی بہبود کی خاطر صحافی ایسی خبروں کی رپورٹنگ پر حق بجانب ہیں۔

ایسوسی ایشن نے اسلام آباد ہائی کورٹ سے گزارش کی کہ صحافیوں کے خلاف توہینِ عدالت کی کارروائی ختم کرے۔

قومی خبریں سے مزید

Original Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *