Categories
Breaking news

اوبر اور کیبی فائی ایک بار پھر بارسلونا میں، ٹیکسیاں پھرمنجمد ہو جائیں گی؟

بارسلونا (محمد نبی) دو سال پہلے Uber اور Cabify نے اپنی سروسز اس وقت معطل کی تھیں جب انہیں نئی ہدایات اور ضابطے کا سامنا کرنا پڑا۔ اس کے نتیجے میں ایک نہ ختم ہونے والا ہفتہ بھر ٹیسکی احتجاج کیا گیا مگر کمپنیوں کو آخر کار ہتھیار ڈالنا پڑے۔ بعد میں انہوں نے اپنی سروسز معطل کر دی تھیں۔ تاہم مارچ 2021 میں ہسپانوی کمپنی کیبی فائی نے اس عہد کے ساتھ کہ وہ نئے ضابطے کا پس رکھے گی، سروس بحال کر دی تھی۔

مارچ 2021 میں اوبر کی واپسی ہوئی۔ لیکن اس امریکی کمپنی نے ایک نیا انداز اپنایا۔ بجائے اس کے کہ کیبی فائی کی طرح اپنی گاڑیاں اور ڈرائورز رکھتے، انہوں نے بارسلونا میں موجود ٹیکسیوں کو کھلی چھوٹ دی کہ وہ اس کا سافٹ وئیر مفت میں استعمال کرتے ہوئے خدمات سر انجام دیں۔ مارچ کے مہینے میں ہی اوبر کے خلاف ٹیکسی ڈرائوروں نے ایک بڑا مظاہرہ کیا جس کو “تاریخی احتجاج” کہا گیا جہاں سینکڑوں ٹیکسیوں نے شمولیت کی۔

اب کہ دو کمپنیاں بارسلونا میں چلنے لگیں ہیں۔ پھر ویکسی نیش مہم میں تیزی آنے کے ساتھ حالات معمول پر آنے اور نقل و حرکت کی بحالی نے ماحول مزید سازگار بنا دیا۔ یہ دیکھتے ہوئے ٹیکسی سیکٹر نے ان “ایپس” پر چلتی سواریوں کے خلاف احتجاجی سرگرمیاں دوبارہ شروع کر دی ہیں۔ ٹیکسیاں ان کو اپنی “بقا کا خطرہ” خیال کرتی ہیں۔

حالیہ احتجاج میں ٹیکسی ڈرائوروں نے حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ اس امر کو یقینی بنائیں کہ ایپس پر چلنے والی سواریاں قواعد و ضوابط کو یقینی بنائیں۔ انہوں نے یہ مطالبہ بھی کیا ہے کہ ایک public app کا اجراء کیا جائے تاکہ وہ ان 2 کمپنیوں کا بہتر انداز میں مقابلہ کر سکیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *