Categories
Breaking news

امریکی حکام کے کورونا وائرس سے متعلق انکشافات نے سب کو چونکا دیا

کورونا

امریکی حکام نے کورونا وائرس نے متعلق کہا ہے کہ کورونا وبا کا پھیلاؤ پورے نظام پر حملہ تھا، جس کےلیے امریکا تیار نہیں تھا اور نہ اگلی وبا کےلیے مناسب اقدامات اٹھائے ہیں۔

یہ انکشافات امریکا کے بیماری پر قابو پانے اور روک تھام کے مرکز (سی ڈی سی) کے پرنسپل ڈپٹی ڈائریکٹر نے کیا، انہوں نے کہا کہ ہم نے بطور قوم انتہائی خراب کارکردگی کا مظاہرہ کیا جب کہ دیگر ممالک نے وبائی صورتحال کے دوران بہت بہترین اقدامات اٹھائے۔

سی ڈی سی کے پرنسپل ڈپٹی ڈائریکٹر آنے شوچاٹ نے کہا کہ امریکا نوول کرونا وائرس کی عالمی وبا کےلیے تیار نہیں تھا، اسی لیے ہم ابھی تک وبائی صورتحال سے نمٹ رہے ہیں۔

ڈپٹی ڈائریکٹر سی ڈی سی نے کہا کہ امریکا ایک وبا سے گزرنے کے باوجود مستقبل کی وبا سے لڑنے کےلیے تیاری نہیں کررہا۔

انہوں نے کہا کہ امریکا کو افرادی قوت، اعداد و شمار اور لیبارٹری کے حوالے سے بہت کام کرنا ہے۔

واضح رہے کہ دو روز قبل امریکی ماہرین نے انکشاف کیا تھا کہ کرونا وائرس کے لیبارٹری کی نسبت فطرت کی پیداوار ہونے کا امکان زیادہ ہے۔

واشنگٹن پوسٹ میں شائع ہونے والے تحقیق میں دو امریکی محققین نے دعویٰ کیا ہے کہ کرونا وائرس نے قدرتی ذخائر سے جنم لیکر انسانوں کو اپنی لپیٹ میں لیا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *