Categories
Breaking news

اسپین 9مئی سے تمام پابندیاں ختم،مگر اس کے بعد کیا ہوگا؟

Advertisement

اسپین (محمد نبی) ہسپانوی صدر نے منگل کے روز فاتحانہ اعلان کیا کہ ویکسینیشن کا عمل کامیابی سے چل رہا ہے اور 9 مئی کے”سٹیٹ آف آلارم” یعنی خطرے کی حالت کا اختتام ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ ان کی حکومت مزید کورونا پابندیاں لاگو کرنے کی پوزیشن میں نہیں ہے۔
ماہرین کے خیال میں حکومت نے لوگوں کے لئے کورونا پابندیوں پر عمل نہ کرنے اور آزادانہ گھومنے پھرنے کے لئے قانونی دروازہ کھول دیا ہے۔ ‘سٹیٹ آف الارم’ ختم کرنے کے بعد منتظمین کے پاس عدالتی راستہ ختم ہو جائے گا اور وہ کورونا پروٹوکول کو نافذ کرنے کے لئے قانونی سہارا نہیں لے سکیں گے۔ یہی وجہ ہے کہ کچھ خود مختار کمیونیٹیز نے درخواست کی ہے کہ کم سے کم ایک ماہ کے لئے خطرے کی حالت میں توسیع کر دی جائے اور کچھ پابندیوں کو گرمیوں تک برقرار رکھا جائے۔
نومئی کے بعد جیسے ہی خطرے کی حالت کا اختتام ہوگا، بڑی پابندیاں جیسے کہ پارک، بازار، ہوٹل، بارز وغیرہ کی بندشیں، گھروں میں رہنا، کرفیو، 6 افراد کے ہجوم پر پابندی، ماسک پہننا وغیرہ جیسی پابندیاں بھی ختم ہو جائیں گی۔
خیال رہے کہ یہ پابندیاں مخصوص حالات میں لاگو ہوتی ہیں کیوں کہ ان سے بنیادی حقوق کی پامالی کا خطرہ ہے۔ دوسرے الفاظ میں “سٹیٹ آف الارم” میں ہی ان پابندیوں کا اطلاق ہو سکتا ہے۔ ایک دفعہ خطرے کی حالت کا خاتمہ ہوجائے تو پھر ایسی پابندیاں نافز العمل نہیں ہوں گی اور قانونی راستہ مسدود و محدود ہوجائے گا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *