Categories
Breaking news

اسلام آباد : اٹلی کے سفارتخانے سے ایک ہزار شینگن ویزہ ا سٹیکر چوری

اسلام آباد : اسلام آباد میں اٹلی کے سفارتخانے کے لاکر روم سے مبینہ طور پر ایک ہزار شینگن ویزا اسٹیکرز چوری ہوگئے ہیں۔مقامی میڈیا رپورٹ کے مطابق اٹلی کے سفارتخانے نے 16 جون کو وزارت خارجہ امور کو ایک خط لکھا تھا جس میں ویزا اسٹیکرز کی چوری کی تحقیقات میں مدد طلب کی گئی تھی۔ خط میں بتایا گیا ہے کہ سفارتخانے کے لاکرز روم سے ایک ہزار شینگن ویزا اسٹیکرز چوری ہوچکے ہیں اور چوری شدہ اسٹیکرز کے سیریل نمبرز بھی شیئر کردئیے گئے ہیں ۔

خط میں مزید کہا گیا کہ اطالوی حکام چوری کے ذمہ دار افراد کی تلاش کیلئے اندرونی طور پر تحقیقات کر رہے تھے۔وزارت خارجہ نے خط وصول کر نے کے بعد وزارت داخلہ اور وفاقی تحقیقاتی ایجنسی سے کہا ہے کہ وہ اس معاملے کی تحقیقات کریں اور داخلے اور خارجی راستوں پر ان ویزا اسٹیکرز کی موجودگی سے متعلق کسی بھی خبر کی اطلاع وزارت کو فورادیں۔

شینگن ویزا کیا ہے؟

شینگن ویزا کسی بھی ملک کے قونصل خانے کی طرف سے جاری کردہ دستاویز ہے جو شینگن معاہدے کے ممالک میں سے ایک ہے ، جو آپ کو معاہدے کے کسی بھی ملک کو آزادانہ طور پر دیکھنے کی اجازت دیتا ہے۔ اور اس کے لئے کسی دوسرے ویزے کی ضرورت نہیں ہے۔

یہ ایک مختصر قیام کا ویزا ہے جو ایک شخص کو سیاحت یا کاروباری مقاصد کے لئے 90 دن تک کا سفر شینگن ایریا (یورپی یونین) کے کسی بھی ممبر کے پاس سفر کرنے کی اجازت دیتا ہے۔ 1985 میں پانچ یورپی ممالک نے ایک دستاویز پر دستخط کیے جس میں ان ممالک کے مابین پاسپورٹ کی حکومت منسوخ کردی گئی تھی۔ یہ پروگرام شینگن شہر میں ہوا ، لہذا اس ویزا کا نام لیا گیا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *